”رات کو 2 آیا ت پڑھ کر سو جاؤ نبی کریم ﷺ اللہ کی قسم کھا کر فرمایا:“

جو شخص ان دوآیات کو رات کو پڑھ لے اسے یہ دونوں ہی کافی ہیں۔سورت بقرہ کی خاتمہ کی آیتیں عرش تلے کے خزانے میں سے لایا ہوں۔

مجھ سے پہلے کسی نبی کو یہ آیات نہیں دی گئیں ۔

جب نبی کریم ﷺ کو معراج کرائی گئی اور آپﷺ سے سدرۃ المنتہیٰ تک پہنچے ۔ جو ساتویں آسمان پر ہے۔ جو چیز آسمان کی طرف چڑھتی ہے۔ نیک اعمال، بداعمال ہر وہ چیز وہ یہی تک پہنچتی ہے۔ یعنی سدرۃ المنتہیٰ تک ۔ پھر یہاں سے آگے لے جائی جاتی ہے۔ اس سونے کی ٹیٹیاں ڈھکے ہوئی تھے ۔ وہاں حضور اکرمﷺ کو تین چیزیں دی گئیں۔ پانچوں وقت کی نمازیں،

سورت بقرہ کے خاتمہ کی دو آیتیں اور توحید والوں کی تمام گن اہوں کی بخشش۔ جو لاالہ الا اللہ کا اقرار کرنے والا ہو اس کی بخشش۔ انشاءاللہ! آج کا وظیفہ ان دو آیات کے خاص ہے۔ او ر کس وقت پڑھنا ہے۔ اور کس طرح سے پڑھنا ہے۔ رسول اللہ ﷺ نے فرمایاکہ : سورت بقرہ کی آخری دونوں آیتوں کو پڑھتے رہا کرو۔ میں انہیں عرش کے نیچے خزانوں سے لایا ہوں
جو بھی انسان سورت بقرہ کو پڑھے گا۔ کیونکہ اس سے ش یطان آپ کے گھر سے دور رہے گا۔ اس کے علاوہ اسکے حوالے سے جادوگر اس پر طاقت نہیں رکھتے ۔ اس کے علاوہ آپ کی گھریلو پریشانیاں ختم ہوں گی۔ گھریلو معاملات میں جو تناؤ آجاتا ہے۔ گھریلو معاملات میں جو ناچاقی ہوجاتی ہے۔ گھر میں بے برکتی ہو جاتی ہے۔ ہر وہ معاملہ جو جادو کی طرف سے ، بندش کی طرف سے آپ پر آتا ہے۔ کہیں پر اولاد کی بندش ہے۔

کہیں پر رزق کی بندش ہے۔ کہیں پر معاملا ت میں بندش ہے۔ کہیں پر کاروبار کی بندش ہے ہر قسم کی بندش جادو کے ذریعے یا شیا طین کے ذریعے سے ہی پہنچتی ہے۔ انشاءاللہ ! جو بھی انسان اس عمل کو کرے گا۔ اپنے گھر میں روزانہ آپ کو دومنٹ بھی نہیں لگیں گے آخری دو آیا ت کو پڑھنے میں۔ اول وآخر ایک ایک مرتبہ درود پاک پڑھ کر نبی کریمﷺ کی اس تلقین کو کہ یہ عرش کے خزانوں میں سے ہے۔

خزانہ کیا ہوتا ہے؟ جس کو چھپا کر رکھا جاتا ہے۔ جو بے حد قیمتی ہوتا ہے ۔ انشاءاللہ ! یہ بے حد قیمتی آیا ت ہیں۔ آپ نے روزانہ کی بنیاد پر دن میں یارات میں جب بھی آپ کو وقت ملے آپ نے ان دو آیات کی تلاو ت کرلینی ہے۔ اس نیت سے آپ کی ہررکاوٹ ، ہر پریشانی ختم ہوگی۔ شیطانی معاملات ہیں تو وہ ختم ہوں گے۔ بے برکتی ہوگی تو وہ ختم ہوجائےگی۔

اور اس کے علاوہ اس میں حضرت کعب رضی اللہ عنہ نے فرمایاکہ :اس میں اللہ کے ایسے اسم اعظم موجود ہیں۔ ان کے ذریعے سے جو دعا مانگی جاتی ہے وہ قبول ہوجاتی ہے۔ انشاءاللہ! وہ دعا قبول ہوجاتی ہے۔ یہ تمام تر اس کے فضائل کو ذہن میں رکھتے ہوئے اپنی پریشانی کو اللہ کےسامنے پیش کرنا ہے۔ آپ دیکھیں گے اللہ کے حکم سے آپ کی کوئی پریشانی باقی نہیں رہے گی۔

ناچاقیاں ختم ہوں گی، شیطانی معاملات ختم ہو ں گے ۔ جادو کے اثرات ختم ہوں گے ۔ بندشیں ختم ہوں گی۔ ہر وہ معاملا جس کی وجہ سے آپ ناامیدی اختیار کرچکے ہیں۔ وہ تمام کے تمام اللہ کےحکم سے ٹھیک ہوجائیں گے ۔

Sharing is caring!

Comments are closed.