”گرمی میں مارکیٹ کا مہنگا صابن بھی آپ کے مسائل کو ختم نہیں کرتا“

آج آپ کو بتائیں گے کہ آپ گھر میں میڈیکیٹیڈسوپ کس طریقے سے بنا سکتے ہو۔اس سو پ کو بناؤا وراپنے باتھ روم میں رکھو۔

روزانہ جب بھی آپ نہانے جائیں تو آپ اس سوپ کو استعمال کرو۔ یہ ہر طرح کی الرجی سے بچا کر رکھےگا۔ جسم کےاوپر جو گرمی دانے ہوجاتے ہیں۔ اگر دھوپ میں آپ زیادہ رہتے ہیں۔ تو سکن بڑھنے کا مسئلہ شروع ہوجاتاہے۔سکن بہت زیادہ جلتی ہے۔

ریڈہو جاتی ہے۔ ان تمام مسائل سے آپ کو بچا کررکھے گی۔اس کے علاوہ آ پ کے جسم کے اوپر جو خارش مسئلہ ہوجاتا ہے ۔ یہ تمام مسائل سے آپ کو بچاکر رکھے گا۔ اور بنانا بھی انتہائی آسان اور سستا ساطریقہ ہے۔ ہرکوئی اس کو بنا سکتا ہے۔ کیسے بنانا ہے؟ وہ آپ کو بتالیتے ہیں۔ آپ نے ایک صاف پین لینا ہے۔ اس میں ایک سے ڈیڑھ گلاس پانی کاڈال دیں۔ ایک درمیانے سائز کا جو گلاس ہوتا ہے

جو شیشے کا گلاس ہوتا ہے۔ آپ ڈیڑ ھ گلا س کے برابر پانی لے لیں گے ۔ اس کے بعد ایک مٹھی برابر آپ نے اس کے اندر نیم کی پتیوں کا استعمال کرنا ہے۔ نیم کی پتیاں اگر آپ کےپاس فریش نہیں ہیں۔ تو آپ ڈرائی فارم میں بھی استعمال کرسکتے ہیں۔ اس کے بعد ایک مٹھی کے برابر اس کی پودینے کی پتیاں شامل کردیں۔ اب آپ نے اس کو اتنی دیر پکانا ہے کہ پانی کے آپ کےپاس ڈیڑھ گلاس سے ایک گلاس رہ جائے ۔

اتنی دیر تک آپ نے پکانا ہے۔ جب پانی ایک گلاس رہ جائے۔ تو اس کواچھے طریقے سے چھان لینا ہے۔ اس کے بعد نارملی جو بھی صابن استعمال کرتے ہو۔ اسی سوپ کو کرش کریں۔ اچھے طریقے سے پیس لیں۔ اس کا پاؤڈر بنالیں۔ کوئی سا بھی صابن استعمال کرسکتے ہیں۔ جو عام طور پر گھروں میں استعمال ہوتا ہے۔ اسی سوپ کے ساتھ آپ میڈیکیٹیڈ سوپ بنا سکتے ہیں۔

اس کو بہت اچھے طریقے سے فائن پاؤڈر کی شکل میں بنالیں۔ اس کےبعد اب آپ نے اس پانی کے اندر اس کو شامل کردینا ہے۔ اس کو ایک سے دو ابال پھر سے آنے دیں۔ جب اس کے ایک سے دو ابال آجائیں۔ جب آپ کو لگے کہ یہ پانی کے اندر اچھے طریقے سے مکس ہو گیا ہے۔ پھر اس کو کسی بھی سانچے کےاندر ڈال دیں۔

اور اس کو ایک دن کےلیے فریج کردینا ہے ۔ اس کو فریجر ر میں رکھ دینا ہے۔ اس کو بالکل استعمال نہیں کرنا ہے۔ اس کو اسی طریقے سے فریجر ر میں رہنے دیں۔ اگلے دن میں آپ دیکھیں گے کہ آپ کے پاس ایک سالڈ فارم میں آجائےگا۔ اب آپ اس کو دوبارہ فریجر ر میں رکھنے کی ضرورت نہیں ہے۔ آپ اس کو نارملی آپ اپنے باتھ روم میں رکھیں ۔

اور اس سوپ کو استعما ل کریں۔ اس کے استعمال سے آپ کے جسم کے اوپر کسی طرح کی الرجی نہیں ہوگی۔ خارش نہیں ہوگی۔ دانے نہیں بنیں گے۔اس کے علاوہ آپ کو پکلی پاؤڈر کااستعمال کرنا پڑتاہے۔ کسی بھی طرح کی کسی بھی چیز کا آپ کو استعمال کرنے کی ضرورت نہیں ہے۔ بس آپ کو اس سوپ کا استعمال کریں۔ آپ کو اس کے اچھے رزلٹ ملیں گے ۔

Sharing is caring!

Comments are closed.