”زعفران کے فوائد“

زعفران سب سے مہنگی جڑی بوٹی ہے سنہرے دھاگوں جیسا نظر آنے والا زعفران اپنے اندر بہت سے فائدے رکھتا ہے

۔اس کا مزاج درجہ اول میں خشک اور درجہ دوم میں گرم ہوتا ہے یہ جسم کو گرمی ، توانائی پہنچانے کے ساتھ ساتھ ہاضمہ کے نظام کو بھی درست رکھتا ہے بھوک بڑھانے، کمر، جوڑوں اور پٹھوں کے درد کے لیے اکسیرکی حیثیت رکھتا ہے۔ اس کے علاوہ یہ پکوان میں مصالحے کے طور پر بھی استعمال کیا جاتا ہے زعفرانی بریانی، زردہ اور زعفرانی قورمہ اپنے منفرد ذائقہ کی وجہ سے الگ ہی پہچان رکھتے ہیں۔

اس کے علاوہ یہ دیگر کھانوں کو رنگین اور خوبصورت بھی بناتا ہے۔زعفران کی جڑی بوٹی بیش قیمت اور قیمتی ترین تصور کی جاتی ہے اس لیے اس کا استعمال امراء طبقہ میں زیادہ نظر آتا ہے۔ زعفران کے پھول کو Crocus Sativus سے حاصل کیا جاتا ہے تاریخی روایات کے مطابق زعفران کی کاشت سب سے پہلے ایشیا کوچک میں کی گئی جہاں سے یہ یونان اور اسپین تک پہنچا زعفران کا پودا سدا بہار ہوتا ہے اور یہ پیاز کے پودے سے مشابہت رکھتا ہے اس کی لمبائی 45 ہوتی ہے۔زعفران کے پودے میں ارغوانی رنگ کے پھول کھلتے ہیں۔

پودا لگانے کے ابتدائی چند سال تک اس پر پھول نہیں آتے جیسے جیسے پودا بڑا ہوتا جاتا ہے تب اس پر ہلکے جامنی رنگ کے بھول آنا شروع ہوتے ہیں جن کے بیچ میں لمبے، سنہرے گل ہوتے ہیں یہ گل یعنی Stigmas زعفران بنتے ہیں۔ کیونکہ یہ ایک نہایت قیمتی جڑی بوٹی ہے اس لیے اس کے قیمتی ہونے کی وجہ سے یہ مخصوص علاقوں میں محدود مدت کے لیے کاشت کیا جاتا ہے اس کی کاشت خاصا محنت اور وقت طلب کام ہے اس کے لیے جان توڑ محنت کرنا پڑتی ہے۔ ایک کلو زعفران حاصل کرنے کے لیے تقریباً ایک لاکھ پچاس ہزار سے زیادہ پھولوں سے بقچہ گل Stingmas چنے جاتے ہیں۔ زعفران کو ہندی زبان میں کیسر بھی کہا جاتا ہے۔

Sharing is caring!

Comments are closed.